مرکزی صفحہ » مسئلہ تکفیر » الولاءوالبراء » سوچ کر ہی روح کانپتی ہے، او خارجیو!

سوچ کر ہی روح کانپتی ہے، او خارجیو!

image_pdfimage_print
خوارج کے خودساختہ دین کی قلعی کھول کر رکھ دینے والا ایک سوال​
 
 

اکثر اوقات جب حضرت حاطب بن ابی بلتعہ رضی اللہ تعالی عنہ کا واقع بیان کر کے اس بات کی دلیل دی جاتی ہے کہ جناب دیکھیں کہ ۔

“مسلمانوں کے خلاف جنگ میں کفار سے کسی بھی قسم کا تعاون ہرحال میں کفر اکبر اور باعث ارتداد نہیں ہوتا ، بلکہ کبھی یہ کبیرہ گناہ ہوتا اور کبھی یہ ارتداد کی حد کو چھو جاتا ہے، جس کا فیصلہ فاعل کی حالت اور کیفیت کو جانچ کر ہی لگایا جا سکتا ہے، محض خبروں اور ویڈیوز کو دیکھ کر نہیں”۔

تو خوارج کہتے ہیں کہ بالفرض اگر یہ مان بھی لیا جائے تو پھر بھی اس دلیل سے موجودہ حکمرانوں کے کفر و ارتداد کا انکار ثابت نہیں ہوتا، کیونکہ حضرت حاطب بن ابی بلتعہ رضی اللہ عنہ نے محض مشرکین مکہ کو رسول اللہ صلی اللہ کی جاسوسی کی تھی، اور جب کہ عصر حاضر کے حکمرانوں کا جرم صرف جاسوسی نہیں بلکہ انہوں نے مسلمان “مجاہدین” کو کفار کے حوالے کیا ہے۔ جو کہ ان “مجاہدین ” کی جان کے دشمن تھے ۔
لہذا کسی مسلمان مومن مجاہد کا کفار کے حوالہ کرنا ہر حال میں کفر و ارتداد ہے ، تو ثابت ہوا ہمارےحکمران اور انکے مددگار و حامی سب مرتد ہیں۔

تو اس کے جواب میں میں صرف ایک سادہ سا سوال کرنا چاہتا ہوں:

چلیں اگر ہم آپ کے اصولوں کو سامنے رکھ کر ایک لمحہ کے لئے یہ مان لیتے ہیں کہ کسی بھی مسلمان کو حربی کفار کے حوالے کرنا جو کہ اسے جان سے مارنے کے لئے دھونڈتا پھر رہا (جیسا امریکہ و صلیبی القاعدہ کے لوگوں کو) ہو تو یہ کفر اکبر اور ارتداد ہے..

تو بتاؤ “ظالمو” ، “جہنم کے کتو” ، “بدترین مخلوق” کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے جب حضرت ابو بصیر رضی اللہ عنہ کو جو مشرکین مکہ سے جان بچا کر مدینہ میں پناہ لینے کے لئے بھاگے اور مشرکین اس کے پیچھے تلوار کے ساتھ تعاقب میں آئے تو رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے اس مومن ابو بصیر رضی اللہ عنہ کو مشرکین کے سپرد کر دیا اور وہ انہیں گرفتار کر کے لے گئے تھے۔

تو میرا سوال یہ ہے کہ آپ صلی اللہ علیہ وسلم پر کیا حکم لگےگا؟؟؟
(اگر تمہارے خود ساختہ قوانین کو یہاں اپلائے کیا جائے تو کیا نتیجہ نکلے گا۔۔۔۔؟؟؟ (نعوذ باللہ من ذلک )

سوچ کر ہی روح کانپتی ہے، مگر تمہارے بند دماغ کے تالے نہیں کُھلتے ۔۔۔۔۔او خارجیو

Print Friendly

About alfitan

مزید دیکھئے

خوارج،کبار صحابہ کے قاتل۔ سیدنا طلحہ،زبیر،عمار بن یاسررضی اللہ عنہم

خوارج،کبار صحابہ کے قاتل سیدنا زبیربن عوام و طلحہ بن عبید اللہ  اور عمار بن …