photo721249554916289007

داعش کی ہند پر یلغار کی بڑھک کی حقیقت ۔ تجزیہ ادارہ الفتن

⁠⁠⁠『خصوصی رپورٹ』

【داعش کی ہند پر یلغار کی بڑھک کی حقیقت】

دو چار روز قبل داعش نے بھارتی مسلمانوں کو ہدف بناتے ہوئے ایک نہایت شاہکار اور خوشنما قسم کی ویڈیو جاری کی ہے.
جس میں مختلف بھارتیوں کودکھا جا سکتا ہے ، جن میں تقریبا سب وہی ہیں جو داعش کے ظہور میں آنے کے وقت مشرق وسطی کے مختلف ممالک میں ملازمت کی وجہ سے رہائش پزیر تھے۔

جبکہ گنے چنے دین پسند لوگ شاید بھارتی سے “ہجرت” کر کے اس “خلافت” میں بھرتی ہوئے تھے، ان کو مختلف معاملات کرتے،تربیت،معرکہ اور شہید ہوئے دکھایا گیا ہے.  اور ہند کو نہایت دھمکی آمیز لہجے میں پیغام دیا گیا ہے کہ ہم تیری طرف آرہے ہیں.

یہ تو تھی ویڈیو کی مختصر تفصیل…

ISIS vs Hind

اب زرا اس ویڈیو کے جاری ہونے کے مختلف پہلوؤں پر غور کرتے ہیں.

مثلا؛

سب سے پہلا اور بنیادی پہلو یہ تھا کہ  داعش کا یہ ہے کہ وہ بھارتی مسلمانوں میں، ہندو انتہاءپسندی کی وجہ سے تیزی سے پھیلتی بے چینی کو کیش کروانا چاہتا ہے، جیسا کہ پہلے القاعدہ اور ٹی ٹی پی بھی کوشش کرتی رہی ہیں.

? کیونکہ ایک عرصے سے بھارتی مظلوم مسلمانوں کی امید کا مرکز پاکستان، پاکستانی افواج و آئی ایس آئی اور ہند میں دیگر جہادی حلقوں ، جن کے  ہند میں باقاعدہ نیٹ ورک بھی موجود ہیں۔  اب داعش ان مظلوم اور اسلام پسند بھارتی مسلمانوں بلخصوص نوجوانوں کو اپنی طرف مائل کرنا چاہتی ہے.

یہ بات اب روز روشن کی طرح عیاں ہو چکی ہے کہ بھارتی خفیہ ایجنسیوں کے داعش کے ساتھ شاندار باہمی تعلقات ہیں. یہی وہ واحد وجہ ہے کہ سینکڑوں یرغمال بنائے گئے ہندو شہریوں کو ششما سوراج اور اجت کمار دول با آسانی اور با حیات چھڑوا کر واپس لاچکے ہیں.

اسی کے پیش نظر ایک رپورٹ میں یوں بتایا گیا :

【داعش کا ہند و سندھ کے متعلق نیا اعلامیہ】

داعش کی جانب سے ہند بارے ویڈیو ریلیز کے دو دن بعد ہی اب یہ خبر سامنے آرہی ہے کہ داعش نے دو بھارتی شہریوں  کو تنظیم میں ترقی دی ہے ،   جن کا تعلق ریاست مہاراشٹرا سے ہے، ہند کے حوالے سے ان کے ذمے اہم کام لگا دیا ہے۔

? ان میں سے ایک کلیان علاقے کا فہد تنویر شیخ ہے، جسے نائب خلیفہ مقرر کیا گیا ہے اور اسے اب ابو بکر الہندی کے نام سے پکارا جاتا ہے. نائب خلیفہ ہونے کے ساتھ ساتھ، اس کے ذمے ہندوستان میں مہمات کی ذمہ داری بھی سونپی گئی ہے.

? اس کے علاوہ ایک دوسرے نواجوان جس کا نام امان نعیم تنزیل ہے اور وہ بھی اسی علاقے کا رہنے والا ہے، کو ہند و سندھ کا گورنر مقرر کیا گیا ہے اور اسکا نام بھی تبدیل کر کے ابو عمر الہندی رکھ دیا گیا ہے.

? تنظیم کی جانب سامنے آنے والے پیغام کے مطابق ان دونوں کر خلیفہ و تنظیم وفاداری کی وجہ سے ان عہدوں کے لئے چنا گیا ہے.حالانکہ انکا تیسرا ہندوستانی ساتھی، اریب مجید،جو خلافت کے اس خوشنما جال میں شامل ہونے کے لئے ہندوستان چھوڑ کر مذکورہ بالا دونوں افراد کے ساتھ شام گیا تھا لیکن پھر داعش کی مسلمانوں اور مجاہدین کے خلاف بربریت دیکھ کر وہاں سے فرار ہو کر استنبول پہنچا تھا اور خود کو حکام کے حوالے کر دیا تھا…

یہ رپورٹ ایک انگلش رپورٹ سے ماخوذ ہے، جس کو مکمل پڑھنے کے لئے ذیل میں لنک موجود ہے؛

WhatsApp-Image-20160523
بغدادی کی خلافت میں ترقی پانے والے ہندی دو باشندے

 

دوسرا بڑا مقصد داعش کا یہ ہے کہ  داعش کو چھوڑ کر واپس پلٹنے والے بھارتی مسلمانوں نے اپنے اور دیگر بھارتی و بنگلہ مسلمانوں سے ہونے والے ابتر سلوک پر سے پردہ اٹھایا تھا اور کہا تھا کہ سب سے کم تر وہاں اگر سمجھا جاتا ہے تو وہ بھارتی داعشی جنگجوؤں کو سمجھا جاتا ہے.

اکثر کو وہاں لڑنے کی بجائے یا کسی اچھے مقام کی بجائے جھاڑ پونچ، حجروں اور واش رومز کی صفائی وغیرہ ڈیوٹیز دی جاتی ہیں…

اس ویڈیو کا مقصد داعش کا اپنے بارے پاک و ہند میں پھیلے بھیانک تاثر کو زائل کرنے کی کوشش ہے.

? ہم جانتے ہیں کہ داعش نے جب بھی کسی مسلمان ملک کو دھمکی آویز ویڈیو میں ہدف بنایا ہے تو اس میں اس ملک کے کسی فوجی یا عام شہریوں کو لازمی ذبح یا قتل کرتا دکھایا جاتا ہے  لیکن ابھی نہ اسرائیل اور نہ ہی تازہ بھارت شکن ویڈیو میں کسی یہودی یا ہندو کی بلی چڑھائی گئی ہو.

اس ویڈیو کی اشاعت کے حوالے سے ، داعش کو مزید کئی پہلو پر اس کے فائدوں کا تذکرہ ہوسکتا ہے مگر بڑے اور واضح اہداف جو تھے وہ اوپر بیان کر دئیے ہیں.

وماعلینا الاالبلاغ المبین

تجزیہ؛ مانیٹرنگ سیکشن، ادارہ الفتن